ایمان رکھنے والوں کی محبت ، باہمی شفقت ، اور قریبی تعلقات ایک جسم کی طرح ہیں ۔ جب کوئی حصہ شکایت کرتا ہے تو سارا جسم تکلیف میں مبتلا رہتا ہے ۔ (صحیح مسلم)

امہ ویلفیئر ٹرسٹ کا تعارف

2004 میں اُمہ ویلفیئر ٹرسٹ پاکستان کی بنیاد رکھ کر فلاحی منصوبوں کا آغاز کیا گیا۔ پاکستان ، افغانستان اور کشمیر کے ضرورت مند لوگوں کی تعلیم، صحت، آباد کاری, غذائی قلت جیسے مسائل کا فوری اور دیرپا حل اُمہ ویلفیئر ٹرسٹ پاکستان کا اولین مقصد ہے۔

یہ ممکن ہوا:

  • قدرتی آفات اور ہنگامی صورتِ حال کے متاثرین کو فوری امداد فراہم کرنا.
  • محروم طبقات کی صاف پانی جیسی سہولیات تک رسائی میں بہتری.
  • یتیموں اور بیواوں کی مالی معاونت اور ان کا اپنے حق تک رسائی یقینی بنانا.
  • مساجد،مکانات، اور تعلیمی اداروں کی تعمیر و بحالی
  • مفت علاج معالجہ اور بحالی کی سہولیات تک رسائی.
  • غریب طلباء کومفت تعلیم کی فراہمی۔
  • کم آمدنی والےافراد کے لئے نئے روزگار کے مواقع .

شفافیت

امہ ویلفیئر ٹرسٹ جئید علماء کے زیرنگرانی کام کرتا ہے جواس بات کو یقینی بناتا ہے کہ ادارےمیں بطور نگران اپنی ذمہ داریاں پوری کریں یہ جانتے ہوئے کہ آخر کاراللہ کے ہاں جواب دینا ہے۔ ادارہ شفافیت اورکڑے احتساب کی پالیسی عمل پیرا ہے.

تمام عطیات کی نگرانی کی جاتی ہےاور جائزہ لینے کے بعد اس بات کو یقینی بنایا جاتا ہے کہ زکوۃ، للہ اور صدقہ صحیح طریقے سے استعمال ہو.

ادارے کا عطیہ دہندہ سے لیکرمستفید ہونے والے فرد تک امداد کی رسائی کا ایک شفاف اور مربوط نظام موجود ہے۔

نوٹ: امہ ویلفیئر ٹرسٹ گھر گھر جا کر عطیات جمع نہیں کرتا اگر کوئی اپنے آپ کوادارے کا نمائندہ ظاہر کرے تو اس کوعطیات کی مد میں کچھ نہ دیں اور ادارے کو فوری مطلع کریں۔

یہ بھی یاد رکھیں کہ امہ ویلفیئر ٹرسٹ ہمیشہ دی جانے والی عطیات کے لیئے رسیدمہیا کرتی ہے. اگر آپ کسی نمائندے کو اپنی عطیات دیں تو اس سے ہمیشہ رسید کا مطالبہ کریں.

’’ اُمہ ویلفیئر ٹرسٹ پاکستان جذبہِ ایثار اور سخاوت جیسے اسلامی اصولوں پر کاربند رہتے ہوئے دُکھی انسانیت کی بے لوث خدمت میں مصروفِ عمل ہے ‘‘